**K**PK Golden Sky**A**

عذاب آنکھ میں اُترے تو راستہ نہ ملا

View previous topic View next topic Go down

عذاب آنکھ میں اُترے تو راستہ نہ ملا

Post  Tanha.dil on Sun May 15, 2011 9:49 am




عذاب آنکھ میں اُترے تو راستہ نہ ملا
گلاب خاک میں بکھرے تو راستہ نہ ملا

جنوں کا پہلے سے اِنکار کر لیا ہوتا
اب اس مقام پر مکرے تو راستہ نہ ملا

یہ تیرگی میں چمکتے رہے ادھر سے ادھر
ستارے دھوپ سے نکھرے تو راستہ نہ ملا

کہاں تو موجوں پہ رکھ کر قدم گزرتے تھے
بھنور کے زاویے بپھرے تو راستہ نہ ملا

یہ کائنات تو پیچھے ہی رہ گئی تھی کہیں
ہجوم ذات سے گزرے تو راستہ نہ ملا

لگا تھا ڈوب کے ، منزل کو چھو لیا ہے بتول
مگر جو ڈوب کے ابھرے تو راستہ نہ ملا


avatar
Tanha.dil
FORUMPK MEMBER
FORUMPK MEMBER

Posts : 145
Join date : 2011-04-16
Age : 31
Location : Lahore

View user profile

Back to top Go down

Re: عذاب آنکھ میں اُترے تو راستہ نہ ملا

Post  anaarkali2011 on Mon May 16, 2011 7:20 am

wow superbbbbbb
avatar
anaarkali2011
JUNIOR MEMBER
JUNIOR MEMBER

Posts : 81
Join date : 2011-03-05
Age : 31
Location : Faisalabad-Pakistan

View user profile

Back to top Go down

Re: عذاب آنکھ میں اُترے تو راستہ نہ ملا

Post  Tanha.dil on Mon May 16, 2011 1:50 pm

thanks for sharing
avatar
Tanha.dil
FORUMPK MEMBER
FORUMPK MEMBER

Posts : 145
Join date : 2011-04-16
Age : 31
Location : Lahore

View user profile

Back to top Go down

Re: عذاب آنکھ میں اُترے تو راستہ نہ ملا

Post  anaarkali2011 on Mon May 16, 2011 3:07 pm

most welcome
avatar
anaarkali2011
JUNIOR MEMBER
JUNIOR MEMBER

Posts : 81
Join date : 2011-03-05
Age : 31
Location : Faisalabad-Pakistan

View user profile

Back to top Go down

Re: عذاب آنکھ میں اُترے تو راستہ نہ ملا

Post  Sponsored content


Sponsored content


Back to top Go down

View previous topic View next topic Back to top


 
Permissions in this forum:
You cannot reply to topics in this forum